After giving up the captaincy, Dhoni was the only person who messaged: Virat Kohli

بھارتی کرکٹ بلے باز اور سابق کپتان ویرات کوہلی نے پاک بھارت میچ میں شکست کے بعد پریس کانفرنس میں سابق بھارتی کھلاڑیوں پر برس پڑے اور سب کو حیران کردیا۔

میچ کے بعد کی پریس کانفرنس کے دوران ویرات کوہلی نے انکشاف کیا کہ مہندر سنگھ دھونی واحد شخص تھے جنہوں نے ٹیسٹ کپتانی چھوڑنے کے بعد مجھ سے رابطہ کیا۔ جنوبی افریقہ میں شکست کے بعد ٹیسٹ ٹیم چھوڑ دی۔

انہوں نے مزید کہا کہ جب میں نے ٹیسٹ ٹیم کی کپتانی چھوڑی تو صرف ایک شخص تھا جس کے ساتھ میں ماضی میں کرکٹ کھیل چکا ہوں اور وہ دھونی تھے، مجھے پیغام دیا کہ اس برے وقت میں انہیں ہمدردی اور مدد کی اشد ضرورت ہے۔ ان کے پاس میرا نمبر ہے، بہت سے لوگ مجھے مشورہ دیتے ہیں اور بہت سے لوگ ٹی وی پر میرے گیم پر تبصرے کرتے ہیں، لیکن جب مجھے اس کی ضرورت تھی ان میں سے کسی نے بھی ایسا نہیں کیا۔ اس نے مجھے تسلی دینے یا ہمدردی کے لیے کوئی پیغام بھی نہیں بھیجا۔

ویرات کوہلی نے مزید کہا: “میں یہ نہیں کہہ رہا کہ مجھے پرواہ نہیں ہے، لیکن میرا مطلب ہے کہ میں اپنی کرکٹ پوری ایمانداری کے ساتھ کھیلتا ہوں، جب بھی میں کھیلوں گا تو پوری ایمانداری کے ساتھ کھیلوں گا، اگر آپ مجھ سے کچھ پوچھیں۔ کیا یہ مشورہ دیتے ہیں کہ آپ مجھ سے براہ راست بات کر سکتے ہیں، جب آپ واقعی مجھ سے کچھ کرنے کو کہتے ہیں، جب مجھے کسی سے گیم کے بارے میں بات کرنے کی ضرورت ہوتی ہے تو میں خود اس شخص کے پاس جاتا ہوں، میں اس کے پاس جاتا ہوں اور میں ذاتی حیثیت میں اس سے رابطہ کرتا ہوں۔ اسے نصیحت دو کہ ساری دنیا کے سامنے بیٹھ کر نصیحت کیوں کروں مجھے کوئی پروا نہیں۔

سابق بھارتی کپتان کا کہنا تھا کہ میرے مشکل وقت میں دھونی نے میری حوصلہ افزائی کی، بھارتی کرکٹ میں دھونی وہ واحد شخص ہے جس سے مجھے مخلصانہ لگاؤ ​​ہے، میں ان سے کچھ نہیں چاہتا اور وہ آپ کے علاوہ مجھ سے کچھ نہیں چاہتے۔ اسے بہت کم لوگوں سے حقیقی لگاؤ ​​ہے اور یہ لگاؤ ​​باہمی تحفظ کی طرح ہے۔

Add your comment